پاکستان

نادرا کے دفاتر 4 مئی سے کھولنے کا فیصلہ

نادرا دفاتر بند ہونے سے احساس پروگرام کے تحت رجسٹریشن اور دیگر پروگرامز کا ڈیٹا فیڈ کروانے والے افراد کو مشکلات کا سامنا تھا۔ احساس پروگرام کے تحت لوگوں کو حکومت سے امداد نہیں مل رہی تھی جس کی وجہ یہ تھی کہ جو لوگ احساس پروگرام کے تحت امدادی رقوم لینے احساس پروگرام سینٹر جاتے تھے ان کی انگلیوں کے نشان سسٹم میں نہ آنے کی وجہ سے انہیں امدادی رقوم 12 ہزار روپے نہیں مل پا رہی تھی۔

یہ شکایات بھی تھیں کہ جس وقت لوگوں نے نادرا کے پاس اپنے انگلیوں کے نشانات رجسٹرڈ کروانے کے لیے نادرا دفاتر کا رخ کیا تو وہ بند تھے اور دیگر افراد کو بھی قومی شناختی کارڈ کے حصول کے لیے اپنا بایو ڈیٹا فیڈ کروانے میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑرہا تھا کیونکہ نادرا دفاتر بند ہونے سے لوگوں کا ڈیٹا فیڈ نہیں ہو رہا تھا۔

اب چار مئی سے دفاتر کھل جائیں گے لیکن عملے اور عوام کو ایس او پیز پر عمل کرنا ہوگا اور جو شخص ایس او پیز پر عمل نہیں کرے گا اسے نادرا دفتر کے اندر داخلے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

Back to top button
Close